ایران میں دہشتگردی، جڑیں ڈنمارک میں؟

ہفتے کو ایران کے شہر اہواز میں فوجی پریڈ کے دوران مسلح افراد کی فائرنگ سے 25 افراد ہلاک اور 50 سے زائد زخمی ہوئے تھے۔ دہشتگردی کی اِس بد ترین وارادت کے فوراً بعد تہران میں ڈنمارک ، برطانیہ اور ہالینڈ کے سفیروں کو رات گے وزارت خارجہ میں طلب کیا گیا اور انھیں اس بے رحمانہ واردات کے متعلق آگاہ کرتے ہوئے اس میں ملوث دہشت گردوں کے بارے میں بتایا گیا ۔  ڈینش وزیر خارجہ  آنڈریس سمیوئلسن نے کہا ہے کہ ہفتے کے روز اہواز میں رونما ہوئے  واقع میں ملوث افراد کا ڈنمارک سے کوئی تعلق ہوا تو اس کے انھیں نتائج بھگتنا پڑیں گے ۔ ایران کا  دعویٰ ہے کہ  اس حملے کے ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *